تازہ تر ین

ایسا تو ہوتا ہے ایسے کاموں میں ۔۔۔پی ٹی آئی عائشہ گلا لئی کا پول کھول دیا

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے ان پر اور پارٹی پر الزامات لگانے والی منحرف رہنما عائشہ گلالئی کی اسمبلی رکنیت ختم کرنے کیلئے ریفرنس چیف الیکشن کمشنر کو بھجوایا تھا جس پر پانچ رکنی الیکشن کمیشن کی ٹیم نے کیس کو سنا اس موقع پر پی ٹی آئی چیئرمین کی طرف سے ان کے وکیل سکندر مہمند جبکہ عائشہ گلالئی کی نمائندگی بیرسٹر مسرور نے کی۔پی ٹی آئی چیئرمین کے وکیل نے اس بات کو جواز بنایا کہ عائشہ گلالئی باقاعدہ الیکشن لڑ کر منسٹر نہیں بنیں بلکہ انہیں چیئرمین پارٹی نے مخصوص نشست پر ایم این اے بنایا۔ اس موقع پر عمران خان کے وکیل نے بتایا کہ ان کی موکلہ پارٹی چھوڑ چکی ہیں اور وزیراعظم کی سلیکشن کے موقع پر ووٹنگ کیلئے نہیں آئیں جس پر انہیں شوکاز نوٹس دیا گیا۔ 29 جولائی کو بنی گالہ میں ایک اجلاس کے دوران شیخ رشید کے نام کو وزیراعظم کیلئے فائنل کیا گیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ عائشہ بھی بنی گالا کے منعقدہ اجلاس میں شامل ہوئیں ،اس موقع پر پارٹی چیئرمین نے تمام ارکان کو بتایا کہ پاکستان تحریک انصاف نئے وزیراعظم کے الیکشن میں عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید کی حمایت کرے گی۔ جس پر چیف الیکشن کمشنر نے پوچھا کہ جس دن وزیراعظم کا انتخاب ہونا تھا کیا اس دن عائشہ گلالئی ووٹنگ کیلئے آئیں جس پر عمران خان کے وکیل نے جواب دیا کہ جب وزیراعظم کو منتخب کرنے کیلئے ووٹنگ جاری تھی اس وقت عائشہ گلالئی پریس کانفرنس کے ذریعے پارٹی چھوڑنے کا اعلان کر رہی تھیں جبکہ عائشہ گلالئی نے تحریری جواب میں غلط بیانی کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم کو منتخب کئے جانے کے وقت وہ بیمار تھیں۔ چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل سکندر مہمند نے الیکشن کمیشن میں عائشہ گلالئی کی پریس کانفرنسوں، نجی ٹی وی پروگراموں میں ان کی بات چیت سے متعلق ٹرانسکپرٹ بھی پیش کئے جس میں وہ پارٹی چھوڑنے کا کہہ رہی ہیں۔ الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کے وکیل سے پوچھا کہ کیا عائشہ گلالئی نے کہا کہ وہ پارٹی چھوڑ رہی ہے یا چھوڑ دی ہے جس پر عمران خان کے وکیل نے جواب دیا کہ پارٹی چھوڑ رہی ہوں کا یہی مطلب ہے کہ انہوں نے پارٹی چھوڑ دی ہے۔ الیکشن کمیشن نے ریفرنس پر کارروائی کل تک ملتوی کر دی۔

سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved