تازہ تر ین

30 ہزار جعلی لائسنس

لاہور (خصوصی رپورٹ) شہر میں جعلی اسلحہ لائسنس کی تعداد 30ہزار سے تجاوز کرگئی جبکہ تصدیق شدہ لائسنسوں کی تعداد 92 ہزار ہوگئی ہے جعلسازی میں کون کون ملوث تھے چند افراد کے علاوہ کسی کو سزا نہ مل سکی۔ سالہا سال سے ڈی سی او آفس لاہور سے جاری ہونیوالے اسلحہ لائسنس کےساتھ ساتھ جعلی لائسنس بھی بنتے رہے بعض چھوٹے ملازمین نے اندراج اور منظوری لئے بغیر جعلی مہریں لگا کر اسلحہ لائسنس بناتے رہے جس میں زیادہ تر نائن ایم ایم، 30,32 بور اور پمپ ایکشن کے بنائے گئے تھے اسلحہ لائسنس کمپیوٹرائزڈ ہونے پر جعلسازی کا انکشاف ہوا۔ انکوائری میں دس ہزار لائسنس کی نشاندہی ہوئی جس کے الزام میں چند سرکاری ملازمین اور پرائیویٹ افراد کے خلاف کارروائی کی گئی اسلحہ لائسنس بننے تو بند ہوگئے لیکن لائسنس کی تصدیق کاعمل تاحال جاری ہے، یوں اب تک جعلی لائسنس کی تعداد 30ہزار سے تجاوز کرگئی ہے اور تصدیق شدہ لائسنس کی تعداد 92ہزار آگئی ہے، 30 ہزار لائسنس کن لوگوں نے بنائے اس امر کی تصدیق ہونا باقی ہے۔ ڈی سی آفس ترجمان کا کہنا ہے کہ لائسنس تیار کرنا ہوگئے ہیں، ذمہ داران کیخلاف گزشتہ ڈی سی اوز کرچکے ہیں، جعلی لائسنس کی تعداد کتنی ہے اس کے بارے میں کوئی کچھ نہیں بتاسکتے لیکن کمپیوٹرائزڈ لائسنس تصدیق کیلئے آئیں گے تو کلیئر ہونے لاپتہ چلے گا۔

 


سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved