تازہ تر ین

جعلی کون اصلی کون ؟وارڈنز کی دھوکہ دہی سامنے آگئی

لاہور(ویب ڈیسک) سی ٹی او نے اپنے ہی محکمے کے اہلکاروں کا موقف سننا گوارہ نہ کیا اور جعلی وارڈنز کی گواہی پر اصلی وارڈنز کو برطرف کردیا۔لاہور کے علاقے شیراکوٹ میں فراست، ایوب اور محمداعظم نامی نوسرباز رات کے وقت ٹریفک وارڈن کی وردی پہن کر ٹرک ڈرائیوروں سے بھتہ وصول کرتے رہے۔ پکڑے جانے پر جعلی وارڈنز نے الٹا اصلی وارڈنز پر الزام لگادیا کہ وہ انہی کی ایما پر کام کررہے تھے۔معاملے کی تحقیقات شروع کی گئی تو اس میں بھی جعلی وارڈنز کو مبینہ طور پر محکمے کی بھرپور حمایت حاصل رہی جب کہ اصلی وارڈنز کا موقف بھی نہ سنا گیا۔ اصلی وارڈنز کےخلاف انکوائری کےدوران جعلی وارڈنز دو مرتبہ وردی پہنے پکڑے گئے۔ اس حوالے سے تھانہ شیراکوٹ اور ساندہ میں جعلی وارڈنز کےخلاف دو مقدمات بھی درج ہیں۔ اس کے باوجود سی ٹی او نے عادی مجرم جعلی وارڈنز کی گواہی پر اصلی وارڈنز کو ہی فارغ کردیا۔


سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں




دلچسپ و عجیب
کالم
آپ کی رائے
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved