تازہ تر ین

نواز شریف کی جیل سے تصاویر لیک ہونے کا معاملہ، تحقیقات کیلئے 2 رکنی کمیٹی قائم

راولپنڈی ویب ڈیسک ) انسپکٹر جنرل (آئی جی) جیل خانہ جات مرزا شاہد سلیم بیگ نے اڈیالہ جیل سے سابق وزیراعظم نواز شریف اور پارٹی رہنما حنیف عباسی کی تصاویر لیک ہونے کے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے واقع کی تحقیقات 2 رکنی کمیٹی کو سونپ دیں۔آئی جی جیل خانہ جات کی 2 رکنی تحقیقاتی کمیٹی میں ڈی آئی جی جیل خانہ جات ملتان ریجن ملک شوکت فیروز اور اے آئی جی جوڈیشل ملک صفدر نواز شامل ہیں۔ذرائع کے مطابق کمیٹی 21 ستمبر کو اڈیالہ جیل پہنچ کر معاملے کی تحقیقات کرے گی۔آئی جی جیل خانہ جات آفس کے ذرائع نے بتایا کہ کمیٹی کی رپورٹ پر قانون کے مطابق کارروائی ہوگی، ان کا مزید کہنا تھا تصاویر نواز شریف کی ضمانت کے بعد کی ہیں اور یہ جیل کے اندر کی نہیں ہیں۔ادھر مذکورہ تصاویر کے حوالے سے جیل حکام کا موقف تھا کہ سپرنٹنڈنٹ جیل حنیف عباسی یا کسی بھی قیدی کو دفتر بلا سکتے ہیں۔جبکہ جیل ذرائع نے کہا کہ رہائی پر مٹھائی کا جیل میں آنا معمول کی بات ہے اور ساتھ ہی کہا کہ صرف موبائل کیمرے کے سپرنٹنڈنٹ آفس تک جانے کی انکوائری کی جائے گی۔خیال رہے کہ 19 ستمبر 2018 کو اسلام آباد ہائی کورٹ نے ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا پانے والے مسلم لیگ (ن) کے قائد اور ان کی صاحبزادی اور داماد کی سزاو¿ں کو معطل کرتے ہوئے ان کی رہائی کا حکم دیا تھا۔جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس میاں گل حسن پر مشتمل ہائی کورٹ کے 2 رکنی بینچ نے سزا معطلی کی درخواست منظور کرتے ہوئے مختصر فیصلہ سنایا، جس میں کہا گیا تھا کہ درخواست دہندگان کی اپیلوں پر فیصلہ آنے تک سزائیں معطل رہیں گی جبکہ سزا معطلی کی وجوہات تفصیلی فیصلے میں بتائی جائیں گی۔


سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved