تازہ تر ین

تاریخ میں پہلی مرتبہ جڑواں بچوں کے دو الگ الگ باپ

لندن(ویب ڈیسک) یہ کیسے ممکن ہے کہ ایک خاتون کے ہاں دو جڑواں بچے پیدا ہوں اور ان دونوں کے باپ الگ الگ ہوں۔ سائنس نے یہ کرشمہ بھی کر دکھایا ہے اور برطانیہ میں ایک خاتون نے دو ایسے جڑواں بچوں کو جنم دیا ہے جن کے باپ الگ الگ ہیں۔ ان بچوں میں ایک لڑکی اور ایک لڑکا ہے۔ لڑکی کا نام الیگزینڈرا اور لڑکے کا نام کیلڈر رکھا گیا ہے۔ کیلڈر کے باپ کا نام گرائمی ہے جبکہ الیگزینڈرا کا باپ سائمن نامی شخص ہے۔یہ دونوں شخص ایک ہی خاتون سے اپنا اپنا بچہ پیدا کرنا چاہتے تھے جس کے لیے انہوں نے 25ہزار پا?نڈ (تقریباً 45لاکھ 93ہزار روپے)کے عوض ایک کینیڈین خاتون کی بطور ’سروگیٹ‘ (متبادل ماں)خدمات حاصل کیں، جس کا نام میگ سٹون ہے۔ ڈاکٹروں نے ان دونوں کے سپرمز اور میگ سٹون کے بیضے لے کرآئی وی ایف(مصنوعی طریقہ افزائش)کے ذریعے لیبارٹری میں الگ الگ ایمبریو بنائے اور پھر دونوں کو میگ سٹون کے پیٹ میں رکھ دیا، جہاں پرورش پانے کے بعد چند ہفتے قبل دونوں بچے صحت مندی کے ساتھ پیدا ہوئے۔بچوں کی پیدائش کے بعد میگ سٹون کا کہنا تھا کہ ”میں نے سائمن اور گرائمی کی پروفائل ایک سروگیسی ویب سائٹ پر دیکھی۔ میری حال ہی میں طلاق ہوئی تھی اور میں اگلا بچہ پیدا کرنے کے لیے تیار تھی چنانچہ میں نے ان سے رابطہ کیا اور ان کے بچوں کی ماں بننے کی حامی بھر لی۔ “ سائمن کا کہنا تھا کہ ”مجھے اور سائمن کو بچے چاہئیں تھے لیکن ہمارے درمیان یہ کشمکش تھی کہ ان بچوں کا والد ہم میں سے کون ہو گا۔ پھر ہمیں لاس اینجلس میں واقع ایک کلینک کے ڈاکٹروں میں بتایا کہ ہم دونوں بیک وقت باپ بن سکتے ہیں۔ جب انہوں نے ہمیں طریقہ بتایا تو ہم نے فوراً سروگیٹ کی تلاش شروع کر دی۔“


اہم خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved