All posts by asif azam

جنسی زیادتی کا الزام, رکن اسمبلی گرفتار

نئی دہلی (نیٹ نیوز) بھارتی ریاست کیرالہ سے کانگریس کے منتخب رکن پارلیمنٹ کو خاتون کے ساتھ جنسی زیادتی کے الزام میں پولیس نے حراست میں لے لیا۔ سینئر پولیس افسر کے مطابق رکن اسمبلی ایم ونسنٹ کی باقاعدہ گرفتاری کے لیے انہیں سپیکر کی اجازت کی ضرورت ہے، ابھی انہیں صرف پوچھ گچھ کیلئے حراست میں لیا گیا۔ رکن اسمبلی ایم ونسنٹ نے اپنے خلاف الزام کو بے بنیاد قرار دیا ہے۔

ایف سی چیک پوسٹ کے قریب دھماکہ, الرٹ جاری

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) پشاور کے علاقہ بڈھ بیر شین درنگ میں ایف سی چیک پوسٹ کے قریب دھماکہ، پولیس کے مطابق دھماکے میں ایک اہلکار شہید جبکہ ایک زخمی ہوگیا۔ سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لیکر سرچ آپریشن شروع کردیا۔ دھماکے میں زخمی ہونے والے اہلکار کو طبی امدادکیلئے ہسپتال منتقل کردیاگیا۔

حج آپریشن متاثر ہونے کا خطرہ, بڑی وجہ سامنے آگئی

کراچی(خصوصی رپورٹ)پی آئی اے کی حج آپریشن کی تیاریاں نامکمل ہیں، حج آپریشن کے لیے طیاروں کی کمی کا سامنا ہے جس کے سبب آپریشن متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔اطلاعات کے مطابق پی آئی اے طیاروں کی کمی کے باعث تاحال حج شیڈول تیار نہ کرسکی، پی آئی اے نے سعودی ایوی ایشن کو طیاروں کا شیڈول فراہم نہ کیا اور شیڈول نہ ملنے کی وجہ سے ایس جی ایس نے ویزوں کا اجرا نہیں کیا۔پی آئی اے نے حج آپریشن 24 جولائی سے شروع کرنے کا دعوی کیا تھا تاہم اب حج آپریشن بری طرح متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔اطلاعات ہیں کہ پی آئی اے کو لیز پر بوئنگ 777 طیارہ تاحال نہیں مل سکا جس کے بعد اب امکان ہے کہ حج آپریشن کے لیے یورپ جانے والی پروازوں کا شیڈول متاثر کیا جائے گا۔مزید اطلاعات آئی ہیں کہ طیاروں کی کمی سے پی آئی اے کا اندرون ملک فلائٹ کا شیڈول بھی متاثر ہوا ہے، اندرون ملک کے لیے پروازوں کی روانگی اور آمد میں 2 سے 4 گھنٹے تاخیر ہورہی ہے۔کراچی سے اسلام آباد جانے والی پرواز پی کے 372 میں 3 گھنٹے تاخیر ہوئی، کراچی سے فیصل آباد کے لیے پرواز پی کے 342 تین گھنٹے سے زائد لیٹ ہوئی۔اسی طرح لاہور سے آنے والی پرواز پی کے 307 میں 2 گھنٹے سے زائد تاخیر ہوئی جس پر کراچی ائیرپورٹ پر مسافروں نے پی آئی اے انتظامیہ کے خلاف احتجاج بھی کیا ہے۔دریں اثنا پی آئی اے میں پائلٹس کی شدید قلت ہوگئی ہے، اسلام آباد سے پیرس(میلان)پرواز نے سی اے اے قوانین نظر انداز کردیے، 2 کپتان کے بجائے ایک کپتان اور 2 فرسٹ آفیسر کے ساتھ پرواز روانہ ہوئی۔طویل پروازوں پر ایئر نیوی گیشن حکم نامے کی خلاف ورزی کی گئی، قانون کے مطابق 2 کپتان اور ایک فرسٹ آفیسر کو جانا چاہیے۔

تاریخ میں پہلی بار آرمی چیف نے وہ کردکھایا جو کوئی اور نہ کرسکا

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ) ملکی تاریخ میں پہلی بار آرمی چیف پروٹوکول اور سکیورٹی کے بغیر ڈنر کرنے پہنچ گئے۔ نجی ٹی وی کے مطابق آرمی چیف قمر جاوید باجوہ نے فیملی کے ہمراہ مقامی ہوٹل میں کھانا کھایا اور شہریوں میں گھل مل گئے۔

خود کو معافی دینے کا اختیار حاصل, ٹرمپ کے بیان نے طوفان کھڑا ہوگیا

واشنگٹن (خصوصی رپورٹ) اپنے عہد صدارت کے پہلے روز سے ہی تنازعات اور بحرانوں کے شکار ڈونلڈ ٹرمپ نے ہفتے کے روز اپنے تازہ ٹویٹ پیغامات میں جہاں متعدد متنازعہ تبصرے کئے ہیں وہاں ایک نیا شوشہ چھوڑ کر ایک نیا طوفان کھڑا کر دیا ہے۔ صدر ٹرپ نے دعویٰ کیا ہے کہ صدارتی انتخابات میں ان کی انتخابی ٹیم کی روس کیساتھ ملی بھگت کی تفتیش میں اگر ان پر الزام لگا تو ان کے پاس اپنے آپ کو معافی دینے کا ”مکمل اختیار“ ہے۔ قبل ازیں جمعرات کے روز ”واشنگٹن پوسٹ“ نے خبر دی تھی کہ صدر ٹرمپ اپنے معافی دینے کے اختیار کو سمجھنے کی کوشش کر رہے ہیں اور اب صدر ٹرمپ نے نہ صرف اس کی تصدیق کر دی ہے بلکہ ثابت کر دیا ہے کہ معافی کے اختیار کاجائزہ لینے کے بعد اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ انہیں اپنے آپ کو معافی دینے کا مکمل قانونی اختیا ر حا صل ہے بلکہ وہ اپنے مشیروں اور خاندان کے ارکان کیلئے بھی اس کا استعمال کر سکتے ہیں۔ اس دوران سی این این نے ایک پروگرام میں یہ سوال اٹھایا ہے کہ کیا صدر کو واقعی ایسا اختیار حاصل ہے یا نہیں؟ سی این این کے مبصر نے ایک قانونی و آئینی ماہر مشی گن سٹیٹ یونیورسٹی میں لا پروفیسر برائن کیٹ سے ا س سوال کا جواب بذریعہ ای میل حاصل کیاہے، جس میں پروفیسر نے لکھا ہے کہ صدر کو مواخذے کے مقدمات کے سوا دیگر معاملات میں امریکہ کیخلاف جارحانہ عمل کرنیوالے افراد کو معافی دینے کا اختیار حاصل ہے۔ تاہم ریاست کیخلاف جرائم اور کانگریس میں شروع ہونیوالے مواخذے کا عمل صدر کے معا فی کے اختیار سے باہر ہیں۔ پروفیسر کیٹ سے دوسرا سوال یہ کیا گیا تھا کہ کیا صدر کے اپنے عہدے پر موجود ہونے کے وقت ان پر مقدمہ چل سکتا ہے؟ تو انہوں نے جواب دیا میں نے اپنی ایک کتاب میں بھی لکھا تھا متعدد لوگوں نے یہ دلیلیں دی ہیں کہ عہد صدارت کے دوران صدر پر مقدمہ نہیں چل سکتا لیکن یہ بہت پیچیدہ معاملہ ہے اور اس بحث کے دونوں طرف دلیلیں موجود ہیں۔ صدر ٹرمپ نے اپنے ٹویٹ پیغام میں واضح کہا ہے کہ ہم سب اس بات پر متفق ہیں کہ صدر کو معافی دینے کا مکمل اختیار حاصل ہے۔ پھر ہمیں اس کے بارے میں سوچنے کی کیا ضرورت ہے۔ جب ہمارے خلاف ابھی تک واحد جرم جو سا منے آیا ہے وہ افشا ہونے کا ہے جوجعلی جز ہے۔ اس طرح میڈیا میں ایک نئی بحث چھڑ گئی ہے۔ ٹرمپ انتظامیہ جہاں بیرونی تعلقات میں مشکلات کا شکار ہے وہاں داخلی سطح پر بھی بحرانوں میں مبتلا ہے جس کا تازہ اظہار اٹارنی جنرل چیف سیشنز کیساتھ صدر کے اختلافات ہیں، جیسا کہ توقع کی جا رہی تھی ۔ ٹرمپ ٹیم کی روس کیساتھ مبینہ ملی بھگت کا معاملہ بتدریج سنجیدہ ہوتا جا رہا ہے۔ اس کے گمبھیر ہونے کا تازہ ثبوت صدر کا اپنے آپ کو معافی دینے کے قانونی اختیار کا ٹویٹ پیغام میں اظہار ہے۔ صدر ٹرمپ نے دیگر ٹویٹ پیغامات میں اپنی مخالف امیدوار ہلیری کلنٹن کے ای میلز کے معاملے پر ایک بار پھر تنقید کی ہے۔ انہوں نے اوبامہ کیئر منسوخ کرنے کی اپنی کوششوں کی راہ میں رکاوٹوں پر بھی سخت نکتہ چینی کی۔
ٹرمپ دعویٰ

شرجیل میمن سمیت اہم شخصیات بھی دبئی میں کمپنیوں کے ملازم نکلے

کراچی (خصوصی رپورٹ) ابھی وزیراعظم نوازشریف کی دبئی میں ایک کمپنی میں ملازمت کی بات پرانی بھی نہیں ہوئی کہ سندھ کے ایک سابق اور ایک حالیہ امیر وزیر شرجیل انعام میمن اور سہیل انور سیال کے نام دو الگ الگ کمپنیوں میں بطور ملازم سامنے آنے کا انکشاف ہوا ہے جس کے بعد سندھ کی سیاست میں ہلچل مچ گئی ہے۔ شرجیل میمن اور سہیل انور سیال کے بارے میں نئی دستاویزات سامنے آئی ہیں جن میں بتایا گیا ہے کہ دونوں امیر اور بااثر وزراءدبئی کی 2الگ الگ کمپنیوں میں ملازم ہیں اور وہ ہر ماہ وہاں سے باقاعدہ تنخواہ وصول کرتے ہیں۔ یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ دونوں صوبائی وزراءسابق صدر آصف علی زرداری اور فریال تالپور کے قریبی ساتھی ہیں اور وہ دبئی کی کمپنی میں ملازمت کر رہے ہیں جس پر شبہ کیا جا رہا ہے کہ کہیں وہ کسی بڑی سیاسی شخصیت کی آف شور کمپنی میں ملازمت تو نہیں کر رہے۔ دستاویزات سامنے آنے کے بعد دونوں صوبائی وزراءاپنے موبائل فون بھی اٹینڈ نہیں کر رہے اور کسی سے رابطہ بھی نہیں کر رہے ہیں۔

وزیراعظم آرام کیلئے کہاں پہنچ گئے, حیران کُن خبر آگئی

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)پاناماکیس سے شدید پریشان اور نااہلی کے ممکنہ خطرے سے دوچار وزیراعظم نوازشریف ایک روزہ دورے پر فضائی مقام ملکہ کوہسار مری چلے گئے، اس موقع پر وزیراعظم کے ساتھ انکی اہلیہ کلثوم نواز اور صاحبزادی مریم نواز بھی موجود ہیں، وزیراعظم ملکہ کوہسار مری سے کل واپسی کرینگے، یاد رہے کہ وزیراعظم ہرہفتے یا تو رائیونڈ میں اپنے گھر کا دورہ کرتے ہیں یا پھر مری جاتے ہیں ، واضح رہے کہ پاناما کیس میں سپریم کورٹ نے فیصلہ محفوظ کرلیا ہے اور بہت سے صحافیوں کا کہنا ہے کہ پاناما کیس میں وزیراعظم ممکنہ طور پر نااہل ہوسکتے ہیں۔

پیپلز پارٹی کی پھر قلابازی, اپوزیشن میں ہنگامہ

اسلام آباد (خصوصی رپورٹ)  وزیر اعظم کے استعفیٰ کے حوالے سے قرار داد اسمبلی سیکرٹریٹ میں جمع کرانے سے متعلق سابق صدر و شریک چیئرمین آصف علی زرداری کی طرف سے ہدایت پر اپوز یشن لیڈر خورشید شاہ نے اس کی مخالفت کردی ہے ۔ شاہ محمود قریشی نے عمران خان کو حقائق سے آگاہ کردیا اور بتایا ہے کہ پی پی پی اور ن لیگ میثاق جمہوریت اور قومی مفاہمت کے تحت تاحال مک مکا کی پالیسی پر گامزن ہیں۔ وزیراعظم نوازشریف کے خلاف متحدہ اپوزیشن کے 98 ممبران اسمبلی کے دستخطوں سے تیار ہونے والی ریکوزیشن تاحال اسمبلی سیکرٹریٹ کو موصول نہیں ہوئی۔ پی ٹی آئی نے مستقبل کی حکمت عملی کیلئے جلد پارٹی عہدیداروں کا اجلاس طلب کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ تحریک انصاف کے ذرائع نے بتایا ہے کہ قومی اسمبلی میں پاکستان تحریک انصاف کے پارلیمانی لیڈر شاہ محمود قریشی نے عمران خان سے ایک اہم ملاقات کی ہے جس میں انہوں نے بتایا کہ پیپلزپارٹی وزیراعظم نوازشریف کے خلاف اسمبلی میں ریکوزیشن جمع کرانے پر شدید مخالفت کر رہی ہے۔ 9روز قبل متحدہ اپوزیشن کے 98 ممبران اسمبلی نے مشترکہ طور پر اس قرارداد پر دستخط کئے جس میں قومی اسمبلی کا اجلاس بلایا جانا تھا۔ ریکوزیشن پر بلائے جانے والے اس اجلاس میں اپوزیشن جماعت کا یک نکاتی ایجنڈا تھا جس کے تحت سپریم کورٹ کے حکم پر بنائی جانے والی جے آئی ٹی کی رپورٹ کے بعد وزیراعظم سے استعفیٰ کا مطالبہ تھا‘ تاہم پیپلزپارٹی نے اس ریکوزیشن کی مخالفت کی۔ شاہ محمود قریشی نے عمران خان کو یہ بھی بتایا کہ پیپلزپارٹی پی پی پی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کے حکم پر ریکوزیشن پر اجلاس نہیں بلانا چاہتی۔ پیپلزپارٹی کے اس اقدام کے بعد پی ٹی آئی نے فیصلہ کیا ہے کہ وزیراعظم نوازشریف کے خلاف سپریم کورٹ کی جانب سے ممکنہ نااہلی کے فیصلہ کے بعد پیپلزپارٹی سے راہیں جدا کرلی جائیں گی۔ قومی اسمبلی میں سپیکر ایاز صادق کے قریبی ذرائع نے بتایا کہ متحدہ اپوزیشن کے 98 ممبران اسمبلی کی جانب سے تیار کی جانے والی ریکوزیشن تاحال اسمبلی سیکرٹریٹ کو موصول نہیں ہوئی ہے۔

ہڑتال ناکام, ٹرینیں بحال, مسافروں میں خوشی کی لہر

لاہور،ملتان (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تمام ٹرینیں بحال، منزل کی طرف رواں دواں جبکہ تیزگام ایکسپریس مسافروں کو لے کر راولپنڈی سے کراچی کی جانب روانہ ہوگئی ہے۔ وزیر ریلوے نے ڈویژنل سپرنٹنڈنٹس سمیت تمام افسروں کو سراہا، افسروں اور کارکنوں نے رات بھر جاگ کر ہڑتالیوں کو ناکام بنایا۔ ہڑتالی ٹولے کو مسترد کرنے پر ڈرائیورز کو خوش آمدید کہتے ہیں۔ غیرذمہ دار ڈرائیورز کی وجہ سے مسافروں کو پریشانی اُٹھانا پڑی، مسافروں نے تکلیف اور پریشانی کا سامنا کیا معذرت چاہتے ہیں، ہڑتال کی وجہ سے ٹائم اپ سیٹ ہوا اور کہا کہ مسافروں کے تعاون پر ان کا شکریہ ادا کرتے ہیں۔ اب کوئی بھی ٹرین ہڑتال کی وجہ سے نہیں رُکی ہوئی۔ لوکو رننگ باڈی نے 6 مطالبات کا نوٹس دیا تھا۔ انتظامیہ نے 6 میں سے 2 مطالبات کو تسلیم کرلیا تھا۔ ریلوے ڈرائیورز کے تمام مطالبات ماننے والے نہیں، ہم نے بہت محنت سے ریلوے کو اپنے پاو¿ں پر کھڑا کیا۔ رواں سال ریلوے کا ریونیو 40 ارب تک لے گئے۔ ہڑتال کرنے والے 13 ڈرائیورز کو گرفتار کیا گیا۔ ریلوے انتظامیہ نے ڈرائیورز ہڑتال کو ناکام بنا دیا، گرفتار ڈرائیورز کیخلاف دہشت گردی کے مقدمات درج کریں گے اور کہا کہ ریلوے کو جو ریورس گیئر لگائے گا اسے باہر نکال دیں گے، ریلوے کو لُنڈا بازار نہیں بننے دوں گا، یہ لاوارث محکمہ نہیں، تنخواہوں میں اضافہ کا مطالبہ ماننے والا نہیں۔

ظفر حجازی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے, اہم انکشاف سامنے آگئے

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک، نیوزایجنسیاں) عدالت نے چیئرمین ایس ای سی پی ظفر حجازی کو چوہدری شوگر ملز کے ریکارڈ ٹمپرنگ کیس میں 4 روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کردیا۔ تفصیلات کے مطابق چیئرمین ایس ای سی پی ظفر حجازی کو ایمبولینس میں پمز ہسپتال سے ایف 8 کچہری لایا گیا۔ ان کی آمد کے موقع پر سکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کیے گئے۔ کچہری میں اینٹی ٹیرارزم سکواڈ اور خواتین پولیس اہلکاروں سمیت پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی تھی۔ کیس کی سماعت کے دوران پولیس اہلکاروں نے میڈیا کو کمرہ عدالت سے باہر نکالنے کی کوشش کی جس پر سینئر سول جج ویسٹ محمد شبیر نے میڈیا کو عدالتی کارروائی کی کوریج کی اجازت دے دی۔کیس کی سماعت کے دوران ایف آئی اے نے ظفر حجازی کے 10 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی۔ ظفر حجازی کے وکیل نے مو¿قف اپنایا کہ ان کا کل سے شوگر ہائی ہے جبکہ انہیں نا کردہ گناہوں کی سزا دی جا رہی ہے۔ عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد ظفر حجازی کو 4 روزہ جسمانی ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کرتے ہوئے کیس کی مزید سماعت ملتوی کردی۔ چیئرمین ایس ای سی پی ظفر حجازی کو پمز ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں انہیں شعبہ امراض قلب کے آئی سی یو میں زیر علاج رکھا جا ئے گا۔ پمز ہسپتال کے ڈاکٹرز کا کہناہے کہ ظفر حجازی کے دل کی شریانوں میں رکاوٹ پائی گئی ہے جبکہ ان کے گردوں کا مسئلہ بھی ہے۔ ظفر حجازی طبی معائنے کیلئے بنے والے سرٹیفیکٹس میں بھی ریکارڈ رد و بدل کرنے کے ماہر نکلے، پمزہسپتال انتظامیہ کے مطابق ہسپتال انتظامیہ پر دباﺅ ڈال کر ظفر حجازی نے جھوٹے میڈیکل سرٹیفکیٹ بنوائے۔ نجی ٹی وی کے مطابق ظفر حجازی کا پہلا طبی معائنہ کرنے والے سینئر ڈاکٹر نے انکشاف کیا ہے کہ ظفر حجازی کو کوئی بیماری نہیں، وہ صرف بہانہ بنا رہے ہیں، میڈیکل رپورٹ کیلئے دباڈالا جا رہا تھا جب انکار کیا تو ڈاکٹرز کا پینل تبدیل کر دیا گیا۔ پمز ہسپتال انتظامیہ نے کہا ہے کہ طبیعت ناسازی کے باعث چیئرمین ایس ای سی پی کو مزید 24 گھنٹے ہسپتال میں رکھا جائے گاجس کے باعث وہ عدالت میں پیش نہیں ہوسکتے۔ ذرائع وزارت خزانہ کے حوالے سے کہا ظفر حجازی کو معطل نہیں کیا گیا۔ اس حوالے سے 24 جولائی کو وزارت خزانہ کا اجلاس متوقع ہے جس میں سینئر ترین کمشنر کو چیئرمین بنائے جانے کا امکان ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ایس ای سی پی میں کمشنر لیگل طاہر محمود سینئر ترین ہیں۔