Tag Archives: atom-bomb

ایران کا ایٹم بم تجربہ…. خوفناک انکشاف

ڈیووس ، ریاض (ویب ڈیسک) 47 ویں عالمی افتصادی فورم سے خطاب کرتے ہوئے سعودی وزیرخارجہ عادل الخبیری نے کہا ہے کہ ایران کا کوئی بھروسہ نہیں کہ وہ ایٹم بم کا تجربہ نہ کر سکے۔ ایران کے پاس 12 سال تک یورینیم کی افزودگی اور اس طاقت کی موجودگی پر سعودی عرب اور دیگر ممالک کو اندیشوں کا سامنا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایران کو دہشتگردوں کی معاونت اور علاقائی ممالک کے داخلی معاملات میں مداخلت کا قصور وار سمجھتے ہیں۔

بھارتی حکام کی نیندیں حرام …. ایٹمی ساخت خطرے میں

نئی دہلی(ویب ڈیسک)بھارتی ایٹمی پروجیکٹ تارا پور کے فیز تھری کا کام روک دیا گیا ہے، اطلاع ہے کہ بھارتی ایٹمی پروجیکٹ تارا کے فیز تھری میں کام کرنے والے تین سو سےزائد اسرائیلی ایٹمی ماہرین نے ان کے کام میں خلل ڈالنے کی وجہ سے کام روک دیا ہے۔اسرائیلی ایٹمی ماہرین نے اپنے کام بند کرنے کے حوالےسے اپنے ملک کو آگاہ کردیا ہے، معلوم ہواہے کہ بھارتی حکام کی اسرائیلی ایٹمی ماہرین کے کام بند کرنے سے دوڑیں لگ گئی ہیں۔بھارتی حکام نے اس حوالے سے تارا پور جاکر اسرائیلی حکام سے بات چیت کی ، تاہم اسرائیلی ایٹمی ماہرین نے کام کرنے سے منع کردیا ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ اسرائیل اور بھارت کے درمیان ایٹمی معاہدوں سے کئی برس سے آپس کے تعلقات بہت اچھے چل رہے تھے۔گزشتہ روز ایک معمولی واقعہ کی وجہ سے اسرائیلی ماہرین نے اپنا کام اس وقت بند کیاجب تارا پور کے ایک سینئر سائنس دان ڈاکٹر اشوک دیر سنگ نے اسرائیلی حکام کے ساتھ شراب کے نشے میں غلط باتیں کیں۔ اسرائیلی ماہرین نے اس کا سخت نوٹس لیا ہے جس پر تارا پور ایٹمی پروجیکٹ کے حکام نے اسرائیلی حکام سے معافی مانگی ہےتاہم معاملہ ابھی ختم نہیں ہوا ہے۔

پاکستان کا ایٹمی حملے سے اسرائیل کو صفحہ ہستی سے مٹانے کا فیصلہ…. تہلکہ خیز خبر …. دنیا بھر میں کھلبلی

اسلام آباد (ویب ڈیسک) اے ڈبلیو ڈی ڈاٹ کام پر اسرائیلی وزیردفاع کا جعلی بیان چھپ گیا جس کے مطابق ”اگر پاکستان کسی بھی بہانے اپنی فوجیں شام بھیج رہا ہے تو ہم پاکستان پر نیوکلیئر حملہ کر کے اسے تباہ کردیں گے۔“ اسرائیلی وزارت دفاع خبر جعلی ہونے کی تصدیق بھی کر چکی ہے۔
نجی ٹی وی کیمطابق خواجہ آصف جن کے پاس وزارت دفاع کا قلمدان ہے، ان کو غلط خبر سے غلط فہمی ہو گئی اور اسرائیل کو نیوکلیئر حملے کی دھمکی دے ڈالی جس کے بعد امریکی اخبار نیویارک ٹائمز سے خواجہ آصف کے ٹویٹ پر وضاحتی رپورٹ شائع کردی تھی۔