تازہ تر ین

ای سی سی اجلاس میں کئی اہم فیصلوں کی منظوری

ای سی سی اجلاس میں کئی اہم فیصلوں کی منظوری دے دی گئی۔

وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین کی زیر صدارت ای سی سی کا اجلاس منعقد ہوا جس میں وفاقی وزراء، معاونین خصوصی اور مشیروں سمیت دیگر اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔

اجلاس میں پی آئی اے کی ملکیت روزویلٹ ہوٹل نیویارک کے قرضے کی ادائیگی 31 دسمبر 2024ء تک بڑھا دی گئی جب کہ ہوٹل کے 142 ملین ڈالر کے قرضے اور سود کی ادائیگی 2 سال میں قسطوں میں کی جائے گی۔

ای سی سی نے 5 ضروری اشیاء پر جنوری کے دوران بھی سبسڈی جاری رکھنے کی منظوری دیدی جب کہ این ایچ اے کے 2022ء کیلئے بزنس پلان کی منظوری دیدی۔

اعلامیے کے مطابق سمبڑیال کھاریاں موٹروے کے منصوبے کیلئے 8 ارب کے اضافی فنڈز کی فراہمی کی منظوری دی گئی۔

زرمبادلہ بھجوانے کے مراعاتی پیکیج کے تحت ایکسچینج کمپنیوں کے نئے ماڈل کی منظوری دی گئی، فاطمہ فرٹیلائزر کے شیخوپورہ پلانٹ کیلئے گیس ریٹ کے تعین کی بھی منظوری دیدی گئی۔

اکتوبر 2021ء سے جنوری 2022ء کیلئے ریٹ 839 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو ہوگی۔

این ای ایس سی کیلئے تین کروڑ ڈالر سے زائد کی 2 ساورن گارنٹیز دینے کی بھی منظوری دی گئی۔

نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کے کم لاگت گھروں کے منصوبے میں کمرشل بنکوں کی براہ راست مداخلت ختم کرنے کی منظوری دی گئی۔

اس کے علاوہ وزارت میری ٹائم کے ادارے پی این ایس سی کے 19 ذیلی کمپنیوں کیلئے رعائیتوں کی منظوری ہوئی۔

وزارت انرجی کی مالی سال کیلئے ضمنی گرانٹ کی سمری بھی منظورہوئی۔

وزارت داخلہ کے ہیلی کاپٹرز کی مرمت کیلئے 14.62 ملین روپے کی ضمنی گرانٹ کی منظوری جب کہ ایف سی کے ڈی آئی خان کے منصوبے کیلئے 431.88 ملین روپے کی ضمنی گرانٹ کی بھی منظوری دی گئی۔


اہم خبریں





دلچسپ و عجیب
کالم
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2021 All Rights Reserved Dailykhabrain