تازہ تر ین

بھارت: ریپ کا شکار لڑکی کو عدالت جاتے ہوئے جلادیا گیا

لکھنؤ: بھارت میں ریپ کا شکار لڑکی کو عدالت جاتے ہوئے ریپ کرنے والے مرکزی ملزم نے اپنے ساتھیوں سمیت آگ لگادی۔مذکورہ واقعہ سامنے آنے کے بعد عوام میں شدید غصے کی لہر دوڑ گئی ہے۔برطانوی خبررساں ادارے رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق اس سے قبل گزشتہ ہفتے ہی حیدرآباد دکن میں 27 سالہ ڈاکٹر پریانکا ریڈی کے ریپ کے قتل کے بعد ہزاروں افراد نے کئی شہروں میں احتجاج کیا تھا۔مظاہرین اور اراکین اسمبلی کی جانب سے عدالت پر زور دیا گیا تھا کہ ریپ کیسز کو جلد از جلد نمٹایا جائے اور قصورواروں کو کڑی سے کڑی سزا دی جائے۔یہ بھی پڑھیں: بھارت: 22 سالہ لڑکی کا ریپ کے بعد قتل، لاش جلادی گئیادھر بھارت کی شمالی ریاست اُتر پردیش کے دارالحکومت لکھنؤ کے سول ہسپتال کی ڈاکٹر نے بتایا کہ خاتون کو جمعرات کی صبح جلایا گیا، جس کے بعد اسے تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل کیا گیا۔اس حوالے سے پولیس نے بتایا کہ متاثرہ لڑکی کیس کی سماعت میں پیش ہونے کے لیے اناؤ جانے والی ٹرین میں سوار ہونے جارہی تھی کہ اس پر مٹی کا تیل چھڑک کر آگ لگادی گئی۔پولیس سپرنٹنڈنٹ وکرانت ویر نے بتایا کہ ’متاثرہ لڑکی کے بیان کے مطابق اسے آگ لگان میں 5 افراد ملوث تھے، جن میں اس کا ریپ کرنے والا ملزم بھی شامل تھا‘۔مزید پڑھیں: بھارت: خاتون کا ریپ کے بعد قتل، عوام کا احتجاجپولیس حکام کے مطابق واقعے میں ملوث پانچوں ملزمان کو حراست میں لے لیا گیا ہے۔علاوہ ازیں پولیس دستاویز کے مطابق متاثرہ لڑکی نے مارچ میں اناؤ پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی تھی کہ اسے 12 دسمبر 2018 کو اسلحے کے زور پر ریپ کا نشانہ بنایا گیا


اہم خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved