تازہ تر ین

اپوزیشن رات 3 بجے بھی تنظیم سازی کرے، اب کچھ نہيں ہونے والا: شبلی فراز

حکومت کے ترجمانوں کی جانب سے مسلم لیگ (ن) کے رہنما طلال چوہدری پر مبینہ تشدد کے معاملے پر بیان بازی کا سلسلہ جاری ہے۔

میڈیا سے گفتگو میں وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر شبلی فراز  کا کہنا تھا کہ سنا ہے کہ فیصل آباد میں تنظیم سازی عروج پر ہے، اب اپوزیشن جو بھی کرے چاہے رات کو تین بجے تنظیم سازی کرے، اب کچھ نہيں ہونے والا۔

راولپنڈی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ طلال چوہدری نے اپنی ہی جماعت کی خاتون ایم این اے کو ہراساں کر کے ن لیگ کا نام ڈبویا اور لیڈر شپ کا نام روشن کیا، بیگم صفدر اعوان کا امتحان ہے کہ وہ کب طلال چوہدری کو پارٹی سے نکالتی ہیں۔

فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب نے فیصلہ کیا ہے کہ خواتین کو ہراساں کرنے والے کیسز محکمہ اطلاعات خود دیکھے گا، پولیس کو 15 پر جھوٹی اطلاع دینے پر ایف آئی آر کٹے گی، دونوں جانب سے 15 پر کال کی گئی ہیں جو ریکارڈ میں ہیں اور اب دونوں فریقین بھاگ رہے ہیں لیکن ہم ایسا نہیں ہونے دیں گے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ کیس اپنی نوعیت کا علیحدہ کیس ہے جس میں ایک سابق وزیر اپنی موجودہ ایم این اے کو ہراساں کر رہا ہے۔

فیاض الحسن چوہان نے مزید کہا کہ یہ پہلی تنظیم سازی ہے جو رات کے 2 یا 3 بجے ہوتی ہے، میں بھی سیاسی کارکن ہوں اور تنظیم سازی بھی کرتا رہا ہوں لیکن اس واقعے سے ایک واضح پیغام ملا ہے کہ رات کو 3 بجے جو تنظیم سازی ہوتی ہے اس کے نتائج بازو اور پاؤں کی ہڈیاں ٹوٹنے کی صورت میں ہی سامنے آتے ہیں۔

اسی حوالے سے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے سیاسی رابطہ کار شہباز گِل نے مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز پر معاملہ دبانے کا الزام عائد کیا۔

انہوں نے کہا کہ اندرون خانہ معاملہ ختم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے، معاملہ واضح ہے، دیکھنا یہ ہے کہ مریم صفدر کیا کرتی ہیں۔

انہوں نے کہا کہ طلال چوہدری زبردستی گھر میں داخل ہوئے، دھینگا مشتی ہوئی، اس میں ان کی جان بھی جاسکتی تھی، انہوں نے تین دن یہ معاملہ دبائے رکھا اور سارے معاملے کو چپھایا جانا ایک الگ جرم ہے۔

خیال رہے کہ 24 ستمبر کی رات طلال چوہدری فیصل آباد میں مبینہ حملے میں زخمی ہوگئے تھے، طلال چوہدری کے بائیں کندھے پر چوٹ آئی ہے اور وہ لاہور کے نجی اسپتال میں زیرعلاج ہیں۔

مبینہ حملے کےحوالے سے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے سیاسی رابطہ کار شہباز گِل نے طلال چوہدی پر اپنی ہی جماعت کی خاتون رکن قومی اسمبلی کو ہراساں کرنے کا الزام لگایا تھا۔


اہم خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved