تازہ تر ین

عمران خان کے اراکین اسمبلی سیاسی مستقبل بچانے کیلئے مسکن ڈھونڈ رہے ہیں، مریم نواز

مسلم لیگ (ن) کی صدر مریم نواز نے کہا ہے کہ عمران خان کے اراکین اسمبلیوں کو بھی معلوم ہے کہ عمران خان نہ کبھی پہلے آسکا اور نہ اب دوبارہ آئے گا اس لیے وہ اپنے سیاسی مستقبل کو بچانے کے لیے اپنے اپنے مسکن ڈھونڈ رہے ہیں، بہت جلد ان کا شیرازہ بکھر جائے گا۔

لاہور سے ڈسکہ روانگی سے قبل میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے رہنما مسلم لیگ (ن) نے کہا کہ 2 جانیں چلی گئیں اس کے باوجود جس طرح ڈسکہ کے عوام نے جمہوریت کی جنگ لڑی، ووٹ کو عزت دی، انہوں نے نہ صرف ووٹ دیا بلکہ ووٹ پر آخری لمحے تک پہرا دیا اس کا شکریہ ادا کرنے میں ڈسکہ کے عوام کے پاس جارہی ہوں۔

مریم نواز نے کہا کہ انہوں نے سارے حربے آزمالیے، یہ لوگ کھل کر سامنے آگئے، ایک ایک چیز انہوں نے استعمال کی، فائرنگ کروائی، 2 جانیں لیں، الیکشن کمیشن کے بندے اغوا کرلیے، 20 پریزائڈنگ افسران مسنگ پرسن بن گئے۔

ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے ہر طرح کی انتظامیہ، پولیس کو شامل کر کے دھاندلی کا منصوبہ بنایا تھا اس پر عملدرآمد کرنے، ریاستی بدترین دہشت گردی کے باوجود یہ وہاں سے بری طرح ہارے اور یہاں سے انہیں عوام میں اپنی حیثیت کا پتا چل جانا چاہیے کہ آٹا چور، چینی چور، دوائی چور، ووٹ چور کو کس طرح عوام نے چاروں صوبوں کے ضمنی انتخاب میں بری طرح مسترد کردیا ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ کل کچھ اور ویڈیوز سامنے آئیں، جس میں ایک ویڈیو میں ایک پریزائڈنگ افسر یہ بتایا رہا ہے کہ گاڑی میں سوار کچھ لوگوں نے آکر کہا کہ الیکشن کمیشن کی گاڑی میں واپس نہیں جانا بلکہ ہمارے ساتھ جانا ہے۔

مریم نواز نے کہا کہ اس طرح کے ثبوتوں سے یہ کھل کر سامنے آگئے ہیں، میں عمران خان ووٹ چور کا شکریہ ادا کرنا چاہتی ہوں کہ اس نے عوام کو اچھی طرح یہ سمجھا دیا کہ 2018 میں کس طرح عوام کے ووٹ پر ڈاکہ ڈال کر اسے 22 کروڑ عوام کے اوپر مسلط کیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ایک پیج پر ہونے، تمام اداروں کی سپورٹ ہونے کے باوجود، ہر چیز پر قبضہ کرنے کے باوجود پاکستانی عوام نے اسے ہر جگہ سے مسترد کردیا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ کیوں کہ یہ ووٹ نہیں لے سکتے جہاں عوام کے ووٹ کی بات آتی ہے یہ ناکام ہوتے ہیں جہہاں غنڈہ گردی اور بدمعاشی کی بات آتی ہے وہاں یہ سب سے آگے ہوتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس ایک سیٹ کی خاطر 2 جانیں چلی گئیں، نوشہرہ وزیرآباد میں شکست سے بے عزتی ہورہی تھی اس لیے یہ سیٹ وہ لینا چاہتے تھے اس لیے تمام دھاندلیاں کر کے جب کچھ نہ ملا تو 20 پریزائڈنگ افسران کو اغوا کرلیا گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ڈسکے میں بکسے کا ہی پتا نہیں چلا اور یہ دھند کی بات کرتے ہیں تو کیا 361 پولنگ اسٹیشنز میں سے کیا یہ 20 پولنگ اسٹیشنز ہی تھے جن کے لوگوں نے غائب ہونا تھا اور دھند میں 2-4 نہیں بلکہ 12 سے 14 گھنٹوں بعد یہ آئے اور جب یہ آئے تو اچانک نتیجہ تبدیل ہوگیا اور صرف انہی 20 پولنگ اسٹیشنز کا ہوا۔

مریم نواز نے کہا کہ اگر مجھے یہ معلوم ہوتا کہ انہوں نے اس سیٹ کی خاطر ناحق 2 جانیں لے لینی ہیں تو مسلم لیگ(ن) ڈسکہ کی نشست ویسے ہی انہیں دے دیتی۔

ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ عوام ناراض ہے، جب عوام ناراض ہوتے ہیں تو اراکین بھی ناراض ہوتے ہیں، ان اراکین کو بہپت اچھی طرح عوام کے جذبات کا علم ہوتا ہے اس طرح عمران خان کے اراکین اسمبلیوں کو بھی معلوم ہے کہ عمران خان نہ کبھی پہلے آسکا اور نہ دوبارہ آئے گا اس لیے وہ اپنے سیاسی مستقبل کو بچانے کے لیے اپنے اپنے مسکن ڈھونڈ رہے ہیں، بہت جلد ان کا شیرازہ بکھر جائے گا۔


اہم خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved