تازہ تر ین

دوحا میں طالبان اور امریکا کے درمیان بات چیت اختتام پزیر

دوحا میں امریکا اور امارت اسلامیہ کے مندوبین کے درمیان دو روزہ اجلاس اتوار کو اختتام پذیر ہوا جس میں فریقین نے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا۔

افغانستان کی وزارت خارجہ نے امداد کی امریکی پیشکش کا خیرمقدم کیا اور کہا کہ مقامی حکام اور امدادی گروپوں کے ساتھ تعاون کریں گے لیکن اس طرح کی امداد کو سیاسی مسائل سے منسلک نہیں کیا جانا چاہیے۔

ترجمان کے مطابق دونوں فریقوں نے کئی امور پر تبادلہ خیال کیا جن میں سیاسی مسائل بھی شامل ہیں۔

بیان میں کہا گیا کہ امارت اسلامیہ نے دوحا معاہدے کے مکمل نفاذ کا اعادہ کرتے ہوئے مزید کہا کہ اس کا نفاذ مسائل کو حل کرنے کا بہترین راستہ ہے۔

اجلاس کے دوران تمام متعلقہ امور کے بارے میں تفصیلی بات چیت کی گئی اور سفارتی تعلقات کو بہتر حالت میں بحال کرنے کی کوششوں پر زور دیا گیا۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے اتوار کے روز کہا کہ بات چیت سیکورٹی ، دہشت گردی سے نمٹنے، انسانی حقوق اور افغانستان چھوڑنے والے امریکی شہریوں اور افغانوں کے محفوظ راستے کی فراہمی پر مرکوز تھی۔

ترجمان کے مطابق افغان خواتین کی سماجی اور سیاسی زندگی میں شمولیت پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔

ترجمان نیڈ پرائس نے مذاکرات کو واضح اور مثبت قرار دے کر کہا کہ امریکا افغانستان کو امداد فراہم کرتا رہے گا اور اسے براہ راست ضرورت مند لوگوں تک پہنچایا جائے گا۔ ترجمان کے مطابق امریکی وفد نے طالبان پر واضح کیا کہ امریکا طالبان کے باتوں پر یقین نہیں کرے گا بلکہ عملی اقدامات کے بعد فیصلہ کرے گا۔


اہم خبریں





دلچسپ و عجیب
کالم
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2021 All Rights Reserved Dailykhabrain