تازہ تر ین

مفت ادویات بند

لاہور (خصوصی رپورٹ) سرکاری ہسپتالوں میں تشخیصی ٹیسٹوں کے بعد مریضوں کو ادویات کی فراہمی میں دشواری کا سامنا‘ زکوٰة فنڈز اور لوکل پرچیز سے بھی مریضوں کو ادویات کی فراہمی ممکن نہ ہوسکی۔ ہسپتالوں کی انتظامیہ نے مریضوں کو بازار سے ادویات خریدنے کا مشورہ دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق صوبائی دارالحکومت سمیت صوبہ بھر کے سرکاری ہسپتالوں میں مفت ادویات کا سلسلہ مکمل طور پر بند کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے ہسپتالوں میں آنے والے مریضوں کو شدید دشواری کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ ہسپتال میں ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹروں نے مریضوں کو ادویات کی پرچیاں تھمانا شروع کردی ہیں۔ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت آنے کے بعد سرکاری ہسپتالوں میں مفت ادویات کی فراہمی کا سلسلہ مکمل طور پر بند کردیا گیا ہے جبکہ اس سے قبل حکومت کی جانب سے ہسپتالوں میں ہونے والے تشخیصی ٹیسٹوں کے نرخ میں اس حد تک اضافہ کردیا گیا ہے کہ مریضوں کی پہنچ سے باہر ہوگئے ہیں۔ مسلم لیگ ن کے دور حکومت میں ہسپتالوں میں آنے والے مریضوں کو مفت ادویات کی فراہمی کا سلسلہ شروع کیا گیا لیکن نئی حکومت میں ایسی تبدیلی رونما ہوئی ہے کہ سرکاری ہسپتالوں میں فری ادویات کا سلسلہ مکمل طور پر بند کردیا گیا ہے جس سے مریض سخت ذہنی اذیت میں مبتلا ہوچکے ہیں کیونکہ ہسپتالوں میں نہ تو زکوٰة فنڈ اور نہ لوکل پرچیز سے ادویات فراہم کی جارہی ہیں۔ ذرائع کے مطابق ہسپتالوں نے مفت ادویات کا سلسلہ کم کردیا ہے اور صرف وی آئی پی مریضوں کو ادویات فراہم کردی جاتی ہے لیکن باقی ماندہ مریضوں کو ادویات کے حصول کے لئے بازار کا رخ دکھایا جاتا ہے اور مریضوں کے لواحقین کو نسخہ جات کی پرچیاں تھمانے کا سلسلہ شروع کردیا گیا ہے۔


اہم خبریں
   پاکستان       انٹر نیشنل          کھیل         شوبز          بزنس          سائنس و ٹیکنالوجی         دلچسپ و عجیب         صحت        کالم     
Copyright © 2016 All Rights Reserved